زرعی یونیورسٹی کے وائس چانسلر نے چوری کے ملزم کو انوکھی سزا سنادی

فیصل آباد(ویب ڈیسک)زرعی یونیورسٹی فیصل آباد کے وائس چانسلر ڈاکٹرظفراقبال رندھاوا نے لیب اسسٹنٹ کو چوری کرنے کی انوکھی سزا دیدی، ملزم مرکزی جامعہ مسجد میں مسلسل چالیس دن تک پانچ وقت کی نماز باجماعت ادا کرے جبکہ مسجد کمیٹی کے سیکرٹری کو چالیس دن مکمل ہونے پر نمازوں کی رپورٹ جمع کروانے کی ہدایت کردی ہے۔


انسٹی ٹیوٹ آف ہارٹیکلچرل سائنسز کے لیب اسسٹنٹ فرحان خالد نے یونیورسٹی پارکنگ میں کھڑی گاڑی کا دروازہ کھول کر اس میں سے ڈیبٹ کارڈ اور نقد رقم چوری کر لی تھی جس کی انکوائری کرنے پرتصدیق ہوئی تو وائس چانسلر ڈاکٹر ظفراقبال رندھاوا نے پیڈا ایکٹ 2006 کے تحت کارروائی کرتے ہوئے لیب اسسٹنٹ فرحان خالد کو مائنر پنلٹی کا حقدار قرار دے کراس فعل کی مذمت کی اسے وارننگ جاری کردی جبکہ اس کے علاوہ اسے زبردست نصیحت بھی کی گئی .

نصیحت یہ تھی کہ ملزم فرحان خالد یونیورسٹی کی جامعہ مسجد میں مسلسل چالیس دن پانچ وقت کی نماز باجماعت ادا کرے گا اور مسجد کمیٹی کے سیکرٹری کو ساتھ ہی ہدایت کی گئی ہے کہ وہ چالیس دن مکمل ہونے پر اس کی نمازوں کی رپورٹ جمع کروانے کی ہدایت کریں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں