اف ، ریلوے کے ڈرائیور نے کیا کر دیا ؟؟؟ مسافروں کے رونگھٹے کھڑے (ویڈیو دیکھیں)

پاکستان ریلوے کی کسی بھی ٹرین میں مسافروں کی تعداد کم سے کم سینکڑوں میں ہوتی ہے اور ان تمام مسافروں کی قیمتی زندگیوں کو بحفاظت منزل مقصود تک پہنچانا ان کی اولین ترجیح ہونی چاہئے لیکن پاکستان ریلوے میں ایسے بھی واقعات سامنے آتے ہیں کہ جن کی اطلاعات ملنے پر رونگھٹے کھڑے ہو جاتے ہیں اسی طرح کا نیا واقعہ سامنے آ یا ہے


لاہور میں ٹرین ڈرائیور نے غیرذمہ داری کا مظاہرہ کرتے ہوئے خواتین کو ڈرائیونگ سیٹ پر بٹھا دیا، سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ خواتین کو ڈرائیونگ سیٹ پر بٹھا کر ریلوے ڈرائیور نے سیکڑوں مسافروں کی جانیں داؤ پر لگادی جب کہ اس موقع پر اسسٹنٹ ٹرین ڈرائیور بھی موجود نہیں۔

وائرل ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ انجن نمبر 4919 میں ڈرائیور خواتین کو مزید رفتار بڑھانے کا کہتا ہے جب کہ خود خواتین کی مختلف اسٹال سے ویڈیو بنارہا ہے۔

ریلوے حکام کے مطابق ریلوے میں ٹرین انجن چلانے کےلئے خواتین ٹرین ڈرائیو بھرتی ہی نہیں ہیں جب کہ ریلوے انجنوں میں غیر متعلقہ افراد کے داخلے پر بھی پابندی ہے تاہم ریلوے افسران واقعہ پر خاموش تماشائی بنے ہوئے ہیں۔

ویڈیو منظر عام پر آنے پر شہریوں نے شدید غم و غصہ کا اظہار کرتے ہوئے رد عمل دیا ہے کہ وہ اکثر پاکستان ریلوے ٹرین پر سفر کرتے ہیں اور اگر ریلوے کے ڈرائیور ایسا کرتے ہیں تو ریلوے کسی بھی ناخوشگوار حادثہ کا شکار ہونے کے خدشات بڑھ جاتے ہیں ،

مسافروں نے مطالبہ کیا کہ اس ڈرائیور کے خلاف سخت قانونی کارروائی کی جائے.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں