وہاب ریاض کا ورلڈ کپ کیلئے ممکنہ کھلاڑیوں میں شامل نہ ہونےمایوسی کا اظہار ، لیکن کیوں؟؟؟

آج کل دنیا بھر میں کرکٹ کھیلنے والے ممالک ایک روزہ عالمی کپ کے لئے اپنی اپنی ٹیموں کی تشکیل کررہے ہیں یا اپنی ٹیموں کا اعلان کررہے ہیں پاکستان میں بھی کم و بیس یہی صورتحال ہے اس حوالے سے پاکستان کرکٹ بورڈ کی جانب سے ممکنہ 23 کھلاڑیوں کے ناموں کا اعلان کیا ہے جس میں پی ایس ایل اور پاکستان کپ کے کامیاب بائولر تجربہ کار وہاب ریاض کا نام شامل نہیں ہے جس پر وہ مایوسی کا شکار ہیں –

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ انہیں نہیں معلوم کہ کن وجوہات پر انہیں نظرانداز کیا جا رہا ہے۔ مسلسل کارکردگی کے باوجود ان کا نام نہ آنا حیران کن ہے، وہ بہت پریشان ہیں اور ان کے پاس اب کھونے کو کچھ نہیں ہے کیونکہ جو کچھ تھا وہ سب لے لیا گیا یے۔ تاہم انہوں نے واضح کیا کہ وہ امید کا دامن ہاتھ سے نہ چھوڑیں گے اور انہیں اللہ پر یقین ہے، میں نے سخت محنت کی اور وہ رائیگاں نہیں جائےگی۔

33سالہ وہاب ریاض کا کہنا تھا کہ ہر کھلاڑی کا کارکردگی دکھانے کا مقصد پاکستان کی نمائندگی کرنا ہوتا ہے اور میری بھی یہی کوشش ہے کہ میں پاکستان کے لیے کھیلوں لیکن میں سمجھنے سے قاصر ہوں کہ کن وجوہات کی بنا پر مجھے نظرانداز کیا جارہا ہے۔ پاکستان کپ میں مشکلات کے باوجود سخت محنت کی، وہاں باؤلنگ کے لیے بہت جان لگانا پڑی لیکن میں نے اپنا تجربہ بروئے کار لاتے ہوئے محنت سے بہترین کارکردگی دکھانے کی کوشش کی لیکن اس کے باوجود میرا نام نہیں آیا۔

واضح رہے کہ وہاب ریاض نے اپنا آخری ون ڈے انٹرنیشنل میچ 2سال قبل چیمپیئنز ٹرافی میں کھیلا تھا جبکہ آخری ٹیسٹ میچ بھی گزشتہ سال اکتوبر میں آسٹریلیا کے خلاف کھیلا تھا تاہم پی ایس ایل سیزن فور میں اور پاکستان کپ میں ان کی کارکردگی بہترین رہی اوروہ بہترین بائولررہے تھے لیکن اس کے باوجود انہیں ایک روزہ عالمی کپ کے لئے ٹیم کے ممکنہ کھلاڑیوں میں شامل نہیں کیا گیا-

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں