فیصل آباد کے ٹریفک وارڈن رشوت وصول کرنے لگے ، کتنی رقم لیتے رنگے ہاتھوں گرفتار؟؟

اینٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ فیصل آباد نے ٹریفک وارڈن کو 7 ہزار روپے رشوت وصول کرتے رنگے ہاتھوں گرفتار کر لیا ہے، ملزمان سے نشان لگے نوٹ برآمد جبکہ ملزم کو حوالہ پولیس کر دیا گیا –

جڑانوالہ کی رہائشی خاتون روبینہ نے ریجنل ڈائریکٹر اینٹی کرپشن سجاد احمدخان کو درخواست دی جس میں موقف اختیار کیا گیا کہ ڈرائیورنگ لائسنس کے حصول کی مد میں ٹریفک وارڈن ہاشم نے اس سے 7 ہزار روپے رشوت طلب کی لیکن وہ رشوت نہ دینا چاہتی تھی بلکہ اسے رنگے ہاتھوں گرفتار کروانا چاہتی تھی جس پر اسسٹنٹ ڈائریکٹر مانیٹرنگ اینٹی کرپشن زاہد مسعود نظامی کو ریڈ کرنے کی ہدایت کی گئی –

اسسٹنٹ ڈائریکٹر زاہد مسعود نظامی نے سول جج فیصل آباد عمران رضا شاہ کی نگرانی میں چھاپہ مار کر ٹریفک وارڈن ہاشم کو 7 ہزار روپے رشوت وصول کرتے رنگے ہاتھوں گرفتار کرلیا اور ملزمان سے نشان لگے نوٹ برآمد کر لئے گئے، اینٹی کرپشن نے مقدمہ درج کرکے تفتیش شروع کر دی گئی ہے-

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں