جنوبی کوریا کے میوزیکل بینڈ کی مقبولیت عروج پر ، وجہ اذان بن گئی لیکن کیسے ؟؟

جنوبی کوریا کا ایک میوزیکل بینڈ بی ٹی ایس نے دنیا بھر کے مسلمانوں کے دلوں میں گھر کر لیا ہے جس سے اس کی مقبولیت میں روز بروز اضافہ ہو رہا ہے اور مقبولیت انہیں گانے کی وجہ سے نہیں بلکہ آذان کے احترام میں پرفارمنس روکنے سے مل رہی ہے جو دنیا بھر میں اپنی طرز کا منفرد واقعہ ہے –

میڈیا رپورٹس کے مطابق جنوبی کوریا کا میوزیکل بینڈ ’بی ٹی ایس‘ گزرتے وقت کے ساتھ پوری دنیا میں مقبولیت حاصل کرنے میں کامیاب ہورہا ہے اور اس بینڈ کے مداح پاکستان میں بھی بڑی تعداد میں موجود ہیں ، چند روز قبل اس بینڈ نے برطانیہ کے ویمبلے اسٹیڈیم میں پرفارم کیا جسے خوب پذیرائی بھی ملی – اس بینڈ کی خاصیت یہ ہے کہ یہ اپنے مداحوں کو اپنی مقبولیت کی وجہ قرار دیتے ہیں، جبکہ اس بینڈ کے دنیا بھر میں مداحو خود کو بی ٹی ایس کا سپاہی کہتے ہیں۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق برطانیہ میں اپنے اس کنسرٹ کے دوران بی ٹی ایس نے پرفارم کرتے ہوئے اس وقت اپنی پرفارمنس روک دی انہیں مسجد میں اذان کی آواز سنائی دی جس کے بعد مداح اس بینڈ کی مزید تعریف کرنے پر مجبور ہو گئے – ایک مداح نے ٹوئٹر پر لکھا کہ ‘بی ٹی ایس نے مغرب کے وقت پرفارمنس روک دی، کیوں کہ ہم اپنا روزہ کھول رہے تھے- جبکہ ایک اور صارف نے بتایا کہ اس بینڈ نے نہ صرف اذان کا احترام کیا بلکہ نماز پڑھنے کے لیے وہاں موجود مسلمان مداحوں کے لیے ایک مخصوص جگہ بھی رکھی۔

واضح رہے کہ آذان کا احترام کرتے ہوئے لائیو کنسرٹ کرتے ہوئے اپنی پرفارمنس روکنا دنیا بھر میں اپنی نوعیت کا منفرد واقعہ ہے جس کے بعد بی ٹی ایس کے فینز میں لاکھوں کی تعداد میں اضافہ ہو رہاہے جو بتدریج جاری ہے – اس حوالے بی ٹی ایس بینڈ کا کہنا ہے کہ تمام مذاہب کا احترام کرنا ان کے دل کی آواز ہے اور اذان کے وقت پرفارمنس روکنے سے دلی سکون بھی محسوس ہوا –

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں