ظالمانہ بجٹ تاجروں کے معاشی استحصال کے مترادف ہے ، چوہدری شفیق انجم

فیصل آباد فلور ملز ایسوسی ایشن کے چیئرمین چوہدری شفیق انجم نے بجٹ 2019-20 کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ ظالمانہ بجٹ تاجروں کا معاشی استحصال ہے ، اشیائے خوردونوش کی قیمتیں پہلے آسمان سے باتیں کررہی ہیں ، بے شمار ٹیکسز سے غریب آدمی کی کمر ٹوٹ جائے گی-


انہوں نے وفاقی حکومت کے پیش کردہ بجٹ پر رد عمل دیتے ہوئے کہا کہ حکومت نے ہمیں کسی موقع پر بھی اعتماد میں نہیں لیا ، بجٹ کی تیاری میں تاجر برادری کی تجاویز شامل ہونی چاہئے تھی ، ہر چیز پر لگا دیا گیا ہے اس صورتحال میں غریب آدمی کہاں جائے گا –

چیئرمین کا کہنا تھا کہ حکومت کی غلط پالیسیوں کے باعث کاروبار پہلے ہی صفر ہے اب ظالمانہ بجٹ تاجروں کا معاشی استحصال ہے ، بجٹ میں سارا زور ٹیکس اور اشیاء کی قیمتیں بڑھانے پر دیا گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ بجٹ میں عام آدمی کی مشکلات اورمہنگائی کی طرف کوئی توجہ نہیں دی گئی ،جلد بجٹ کے حوالے سے آئندہ کا لائحہ عمل طے کیا جائے گا –

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں