اے لیول کے طلبہ زیادہ نمبروں کے لئے کونسا نشہ استعمال کرتے ہیں ، وفاقی وزیر کا انکشاف

گزشتہ کچھ عرصہ سے ملک کے مختلف تعلیمی اداروں میں منشیات کے استعمال اور فروخت کے حوالے سے متعدد خبریں سامنے آ رہی تھی جبکہ آج انسداد منشیات کا عالمی دن منایا جارہا ہے اوراس حوالے سے منعقدہ تقریب میں وفاقی وزیر برائے انسداد منشیات شہریار خان آفریدی نے ایک بار پھر آئس نشے کے استعمال سے متعلق بڑا دعوی کر دیا ہے جس میں انہوں نے کہا کہ اے لیول کے طلبہ زیادہ نمبروں کے لئے آئس نشے کا استعمال کرتے ہیں۔

اسلام آباد میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ والدین کو پتا ہی نہیں ہوتا کہ ان کے بچوں کے بستے میں کیا ہے – اے لیول کے طلبہ تعلیمی میدان میں بہتر کارکردگی کے لئے منشیات کا استعمال سویٹس کی صورت میں کرتے ہیں – کسی تعلیمی ادارے کا ایک بھی شخص منشیات کا شکار نکلا تو پورے ادارے کےخلاف کارروائی ہوگی۔

واضح رہے کہ وفاقی وزیر شہریار آفریدی پہلےبھی اس طرح کا ایک بیان دےچکے ہیں جس میں انہوں نے اسلام آباد کے تعلیمی اداروں میں 70 فیصد طلبا و طالبات کو نشہ استعمال کرنے والا قرار دیا تھا جس پر کافی تنقید ہوئی اور انہیں بعد میں اپنے بیان کو واپس لینا پڑا تھا –

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں