گورنمنٹ کالج آف ٹیکنالوجی میں کتنے کروڑ کی نئی مشینری لگائی جارہی ہیں ؟؟چیئرمین نےبتا دیا

فیصل آباد (نیوزڈیسک) جائیکا کے ساتھ مفاہمت کی یادداشت کے تحت جی سی ٹی میں 15کروڑ روپے کی لاگت سے مشینیں نصب کی گئی ہیں۔موجودہ بدترین معاشی صورتحال، سرمایے کی عدم دستیابی، پرانی مشینوں اور غیر ہنر مند افرادی قوت کے باوجود ملکی ترقی اور بے روزگاری کے خاتمے کیلئے جہاد کر رہے ہیں۔ یہ بات ٹیوٹا فیصل آباد بورڈ آف مینجمنٹ کے چیئرمین انجینئر عاصم منیر نے میٹنگ سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔ انہوں نے کہا کہ ٹیوٹا میں اس وقت مکینیکل ، ٹیکنیکل، الیکٹریکل اور سول کے تین سالہ ڈپلومے کروائے جاتے ہیں۔

انہوں نے فیصل آباد کے صنعتکاروں کو ملکی برآمدات میں بھر پور حصہ ڈالنے پر زبردست خراج تحسین پیش کیا اور کہا کہ ٹیکنیکل ایجوکیشن اور ووکیشنل ٹریننگ اتھارٹی متعلقہ صنعتوں کیلئے ہنر مند افرادی قوت کی صلاحیتوں میں بتدریج اضافہ کیلئے بھی راہ ہموار کر رہی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ سی پیک کے حوالے سے بھی رپورٹ بنائی گئی ہے جس میں سیکٹر لیبرز کے بارے میں بتایا گیا ہے۔ انہوں نے کہا اس کے علاوہ بھی ٹیوٹا اس بات پر غور کر رہا ہے کہ آنے والی انڈسٹری کی بہتری کیلئے مزدوروں کے ہنر میں مزید کیسے اضافہ کرنا ہے۔ انہوں نے بتایا2018ء میں ڈپلومہ کرنے والے بچوں کی تعداد میں خاطر خواہ اضافہ ہوا ہے جس سے بے روزگاری کی شرح میں کمی ہوئی ۔

انہوں نے بتایا کہ اس سلسلے میں انڈسٹری کو آگاہی دی جا رہی ہے اس کے علاوہ ٹیوٹا نے اس کام کیلئے SLMIS کا سافٹ وئیر بھی شروع کیا ہے ۔ انہوں نے کہا ہمارے ادارے کا مقصد صنعتی پیداوار کے معیار اور مقدار میں اضافہ کیلئے ہنر مند افرادی قوت مہیا کرنا ہے۔ ٹیوٹا بورڈ کے سابق چیئرمین انجینئراحمدحسن نے کہا دنیا تیزی سے چوتھے صنعتی انقلاب کی طرف بڑھ رہی ہے ہمیں بھی ایسے اقدامات کرنے چاہیں تاکہ اس صنعتی دوڑ میں پیچھے نہ رہ جائیں۔ انہوں نے جائیکا کے ساتھ کئے گئے معاہدے کو سراہا ۔ اس موقع پرمزمل سلطان،خواجہ محمدامجد، ڈاکٹر خرم طارق، محمد یونس ، محمد اصغر اور دیگر ممبران بھی موجود تھے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں