بڑے صنعت کاروں کو 280 ارب روپےکا ٹیکس معاف کرنیکا معاملہ ، وزیراعظم نے کیا کردیا؟

وزیراعظم عمران خان نے جی آئی ڈی سی کے حوالے سے تمام کمپنیوں کا فرانزک آڈٹ کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے وزیرتوانائی عمر ایوب اور معاون خصوصی ندیم بابر سے تفصیلات طلب کر ہیں – میڈیا رپورٹس کے مطابق کابینہ کے اجلاس میں وزیرن ناعظم نے جی آئی ڈی سی کی مد میں بڑے صنعتکاروں کو ٹیکس معاف کرنے کا نوٹس لے لیا – اور عمر ایوب اور ندیم بابر سے تفصیلات طلب کر لیں۔

رپورٹس کے مطابق وزیرا عظم نے میڈیا پر چلنے والی خبروں پر وضاحت مانگ لی، وزیراعظم نے ہدایت کی کہ کسی کو ٹیکس معاف نہیں کیا جائے گا، وزیراعظم نے جی آئی ڈی سی کے حوالے سے سب کمپنیوں کا فرانزک آڈٹ کرنے کی ہدایت کردی۔ جی آئی ڈی سی آرڈیننس کو واضح کرنے کے حوالے سے بل لانے اور دیگر قانونی معاملات کیلئے وزارت قانون کو ٹاسک سونپ دیا گیا ہے –

اس حوالے معاون خصوصی ندیم بابرنے واضح کیا ہے کہ 208 ارب روپے کی چھوٹ نہیں دی جائے گی۔ آڈٹ کے بعد جس نے مکمل ٹیکس دیا ہو گا اس کیلیے مراعات کو دیکھا جائے گا اور باقی تمام صنعت کاروں سے پورا ٹیکس وصول کیا جائے گا –

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں