وزیراعظم عمران خان کا بڑا فیصلہ ، جی آئی ڈی سی سے متعلق آرڈیننس واپس

وزیراعظم عمران خان کی جانب سے ایک بڑا فیصلہ سامنے آیا ہے اور انہوں نے گیس انفراسٹرکچر ڈویلپمنٹ سیس سے متعلق آرڈیننس واپس لینے کی ہدایت کردی ہے – اور یہ فیصلہ انہوں نے 208 ارب روپے قرض معاف کرنے سے متعلق حالیہ تنازعے کے باعث شفافیت کو یقینی بنانے کے لیے کیا۔

ترجمان وزیراعظم آفس کے مطابق وزیراعظم کی اٹارنی جنرل کو معاملے پر سپریم کورٹ سے رجوع کرنے کی ہدایت کی ہے جب کہ وزیراعظم قوم کو بتانا چاہتے ہیں کہ عدالت جانے سے فیصلہ خلاف آنے کا بھی خطرہ ہے، عدالت جانے سے حکومت کو پوری رقم واپس ملنے یا کھو جانے کا بھی خدشہ ہے جب کہ آرڈیننس جاری کرنے کا مقصد عدالت کے باہر مذاکرات کے ذریعے 50 فیصد رقم وصول کرنا تھا۔

واضح رہے میڈیا میں آنے والی رپورٹس میں سچائی نہیں اور سپریم کورٹ میں فیصلہ خلاف آنے سے حکومت پر ری فنڈ کی مد میں 295 ارب کا بوجھ پڑنے کا امکان ہے، معاملہ عدالت میں ہونے کی وجہ سے 417 ارب روپے کی رقم پھنسی ہوئی تھی جب کہ سپریم کورٹ نے جی آئی ڈی سی کو منسوخ کردیا تھا، سپریم کورٹ کے فیصلے کے خلاف وفاقی حکومت کی نظرثانی درخواست بھی مسترد ہوئی، سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد نئی قانون سازی کی گئی جو مختلف ہائی کورٹس میں چیلنج ہوئی۔

وزیراعظم عمران خان نے اس معاملہ کو شفاف بنانے کے لئے آرڈیننس واپس لینے کا فیصلہ کیا ہے جبکہ اب نئی صورتحال کے پیش نظر قانونی مشاورت کی جارہی ہے –

ا

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں