پولیس کے ملزمان پر تشدد کی روک تھام ، تھانوں میں سمارٹ فون لے جانے پر پابندی

پنجاب کے مختلف اضلاع میں تھانوں میں پولیس کے ملزمان پر مبینہ تشدد کے واقعات میں تیزی آنے پر آئی جی پنجاب نے کوئی ٹھوس اقدامات تو نہیں اٹھائے تاہم اب انوکھا حکم نامہ جاری کردیا ہے جس کے مطابق پنجاب بھرکے تھانوں میں کیمرے والے موبائل فون لے جانے پر پابندی عائد کردی گئی، سی پی او آفس نے تمام تھانوں کو حکم نامہ جاری کردیا ہے آئی جی پنجاب کی جانب سے جاری کردہ حکم نامے کے مطابق عام شہری سمیت پولیس کاعملہ بھی تھانے میں اسمارٹ فون اپنے پاس نہیں رکھے گا، سائلین اور پولیس اسٹیشن کے عملے کو اپنے کیمرے والے فون ڈیسک پر جمع کرانا ہوں گے ۔

جاری کئے گئے نوٹیفکیشن میں واضح کیا گیا ہے کہ ایس ایچ او اور محرر اس پابندی سے استثناء ہیں ،جبکہ حکم نامے میں مزید کہا گیا ہے کہ پولیس کسی کو غیر قانونی حراست میں نہیں رکھے گی اور نہ کسی شہری پر تشدد کرے گی – اس نئے حکم نامے پر سماجی و عوامی حلقوں میں شدید تنقید کی جارہی ہے کہ پولیس ملزمان پر تشدد پر قابو پائے نہ کہ تشدد کی ویڈیو سامنے آنے کےڈر سے موبائل فونز پر پابندی عائد کردی جائے –

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں