پاکستانی آل رائونڈر ندا ڈار “بگ بیش” کا حصہ بن گئیں ، اب آگے کیا کرنے کی خواہشمند ہیں؟؟؟

پاکستان میں خواتین کی کرکٹ تیزی سے کامیابی کی منازل طے کررہی ہے اور پاکستان ویمن کرکٹ ٹیم نے ٹاپ ٹیموں کیخلاف کامیابیاں حاصل کرکے پیغام دیدیا ہے کہ پاکستان کی خواتین کسی سے بھی پیچھے نہیں – اب جبکہ دنیا ایک گلوبل ولیج بن چکی ہے اور دنیا بھر میں کرکٹ کے میدانوں میں لیگز کا دور دورہ ہے جس میں دنیا کی کامیاب انٹرنیشنل کرکٹرز کا چنائو کیا جاتا ہے- ابھی حال ہی میں پاکستان کی کامیاب آل رائونڈر کرکٹر ندا ڈار نے آسٹریلیا کی بگ بیش لیگ میں کھیلنے کا معاہدہ کیا ہے اوروہ دنیا بھرمیں کسی بھی لیگ میں شرکت کرنے والی پہلی کرکٹر بن جائیں گی جو ایک بڑی کامیابی تصور کی جارہی ہیں –

اس حوالے سے ندا ڈار نے واضح کیا کہ بگ بیش میں کھیلنا صرف میرے لیے ہی نہیں بلکہ پاکستان ویمن کرکٹ کی دیگر پلیئرز کیلئے بھی فائدہ مند ثابت ہو گا- بگ بیش ہو یا کوئی اور ٹورنامنٹ، وہ بطور پاکستان کی نمائندہ وہاں شرکت کرتی ہیں اور اس ٹورنامنٹ میں بھی کوشش ہو گی کہ بہتر سے بہتر پرفارم کرکے پاکستان کا نام روشن کروں- بگ بیش میں کھیلنا ان کا خواب تھا کیونکہ آسٹریلیا میں بہترین کرکٹ ہوتی ہے، وہاں بہترین کھلاڑیوں کے ساتھ کھیل کر بہت کچھ سیکھنے کو ملے گا، بڑے پلییئرز کا مائنڈ سیٹ اور گیم پلان کا پتہ چلے گا- ورلڈ ٹی ٹوئنٹی بھی آسٹریلیا میں ہونا ہے، اس سے پہلے یہ لیگ کھیلنا صرف میرے لیے نہیں بلکہ پاکستانی کی دیگر کھلاڑیوں کے لیے بھی فائدہ مند ثابت ہو گا، جو کچھ میں وہاں سے سیکھ کر آؤں گی اسے دیگر ساتھی کرکٹرز کے ساتھ بھی شیئر کروں گی- بگ بیش ٹیم نے جو ان پر اعتماد کیا ہے اس پر پورا اترنے کی پوری کوشش کروں گی۔

واضح رہے ندا ڈار کیساتھ بگ بیش کی ٹیم سڈنی تھنڈر نے معاہدہ کیا ہے اور پی سی بی کی جانب سے انہیں بگ بیس لیگ کے لئے این اوسی بھی جاری کردیا گیا ہے –

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں