بالغ ہوں ، اپنی مرضی کیساتھ جس سے چاہوں تعلق رکھ سکتی ہوں ، کس نے کرارا جواب دیا؟؟

امریکی گلوکارہ ملی سائرس کو ایک مرتبہ پھر دنیا بھر میں تنقید کا نشانہ بنایا جارہا ہے کیونکہ پہلے انہوں نے اپنے منگیتر سے طلاق لی جبکہ بعد میں ان پر ایک خاتون بلاگر کیساتھ رومانس کرتے دیکھا گیا تھا جس کے ان پر الزام عائد کیا گیا تھا کہ وہ ہم جنس پرستی کی طرف راغب ہیں جبکہ اب گلوکارہ کی ایک ویڈیو سامنے آئی ہیں جس میں وہ بائیس سالہ آسٹریلوی گلوکار کوڈی سمپسن کیساتھ رومانس کررہی ہیں اس طرح یکے بعد دیگر ان کے افئیرز پر ان پر تنقید کا سلسلہ شروع ہو چکا ہے –

میڈیا رپورٹس کے مطابق حال ہی میں گلوکارہ نے ایک ویڈیو سوشل میڈیا پر شیئر کی تھی جس میں انہیں 22 سالہ آسٹریلوی گلوکار کوڈی سمپسن کے ساتھ رومانوی انداز میں دیکھا گیا جس میں خود سے کم عمر گلوکار کیساتھ ایک کمرے میں بوسہ لیتے دیکھا جا سکتا ہے – ملی سائرس کی جانب سے آسٹریلوی گلوکار کو بوسہ دیے جانے کی ویڈیو سامنے آنے کے بعد سوشل میڈیا پر مداحوں نے انہیں تنقید کا نشانہ بنایا جس پر گلوکارہ نے مداحوں کو کرارا جواب دیا کہ ’وہ بالغ خاتون ہونے کے ناتے اپنی مرضی سے کسی بھی پسندیدہ شخص کے ساتھ رمانس کر سکتی ہیں اور انہیں کیا غلط ہے کیا صحیح کا اندازہ ہے‘۔

جس کے بعد سوشل میڈیا اکائونٹس پر خاموشی چھا گئی اور تنقید کا سلسلہ معطل ہو کر رہ گیا ہے –

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں