چھوٹے تاجروں کے مسائل سے آگاہ ہیں ، حل کیلئے کیا کررہے ہیں ؟؟ فرخ حبیب نے واضح کردیا

فیصل آباد (نیوزڈیسک) وفاقی پارلیمانی سیکرٹری برائے ریلویز میاں فرخ حبیب نے کہا کہ حکومت کو چھوٹے تاجروں کے مسائل کا ادراک ہے‘ وزیر اعظم عمران خان سمیت تمام حکومت مشینری تاجروں کو درپیش مسائل کے حل کیلئے سنجیدہ کوششیں کر رہی ہے ۔ حکومت نے گزشتہ ایک سال کے دوران دس ارب ڈالر کا قرضہ واپس کیا ہے جبکہ کرنٹ اکاؤنٹ خسارہ بھی ساڑھے 19ارب سے کم ہو کے ساڑھے تیرہ ارب پر آگیا ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے فیصل آباد چیمبر آف سمال ٹریڈرز اینڈ سمال انڈسٹری کے اجلاس سے کیا‘ اجلاس میں گروپ لیڈر میاں ظفر اقبال‘ بانی صدر چوہدری شفیق انجم‘ سینئر نائب صدر شفیق میانداد‘ نائب صدورشیخ آصف‘ عاصمہ شہزادی ‘ سابق صدور‘ سیکرٹریز ‘ایگزیکٹو ممبران اور سمال چیمبر کے ممبران نے کثیر تعداد میں شرکت کی۔

میاں فرخ حبیب نے کہا کہ مہنگائی‘ بیروزگاری‘ بیرونی قرضہ کا انبار جیسے تحفے ہمیں پچھلی حکومت سے ملے ہیں‘ جب ہمیں حکومت ملی تو ملک دیوالیہ ہونے کے قریب تھا‘ وزیراعظم عمران خان کی سیاسی بصیرت کی وجہ سے آج ہمارا ملک اپنے پاؤں پر کھڑا ہو گیا ہے‘ ڈالر کی قیمتیں کم قیمت کم ہو رہی ہے‘ جس کی وجہ سے مہنگائی میں کمی آ رہی ہے‘ انہوں نے کہا کہ میں آپ کی آواز کو وزیراعظم عمران خان تک پہنچاؤں گا اور آپ کی وزیراعظم کے ساتھ ملاقات بھی کراؤں گا۔

اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے فیصل آباد چیمبر آف سمال ٹریڈرز اینڈ سمال انڈسٹری کے گروپ لیڈر میاں ظفر اقبال‘ بانی صدر چوہدری شفیق انجم‘ شفیق میانداد‘ شیخ آصف‘ عاصمہ شہزادی نے کہا کہ ایس ایم ایز سیکٹر معاشی مسائل سے دوچار ہے‘ ہم ٹیکس دینا چاہتے ہیں‘ انہوں نے کہا کہ فکسڈ ٹیکس سسٹم کا نظام لایا جائے تاکہ تمام تاجر بے خوف ہو کر ٹیکس ادا کر سکیں‘ انہوں نے کہا کہ چھوٹے تاجر ملک کی معیشت میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتے ہیں مگر حکومت انہیں خاطر میں نہیں لاتی اور جب بھی ملاقات کیلئے بلایا جاتا ہے کارپوریٹ سیکٹر کو ہی بلایا جاتا ہے‘ انہوں نے کہا کہ چھوٹے تاجروں بھی اہمیت دی جائے اورانہیں ان کا جائز مقام دیا جائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں