چک جھمرہ اور گردو نواح میں ہیپاٹائٹس کے مرض میں تشویشناک اضافہ ، کتنے مریض ؟؟؟

چک جھمرہ(افضال احمد تتلا ) چک جھمرہ شہر اور گردونواح میں ہیپاٹائٹس کے مرض میں تشویشناک حد تک اضافہ ہوگیا ہے جبکہ انتظامیہ اس موذی مرض کو کنٹرول کرنے میں مکمل ناکام دکھائی دے رہی ہے تفصیلات کے مطابق گذشتہ روز تحصیل چک جھمرہ میں ایک فری میڈیکل کیمپ کا انعقاد کیا گیا تھا جس میں دیگر بیماریوں کے ساتھ ہیپاٹائٹس بی اور سی کے ٹیسٹ کیے گئے تھے-

ذرائع کے مطابق اس میڈیکل کیمپ میں 214 افراد کے ٹیسٹ ہوئے تو ان میں سے 114 افراد میں کا ہیپاٹائٹس سی اور 12 افراد کا ہیپاٹائٹس بی پوزیٹو نکلا جس پر کیمپ کے نگران ڈاکٹروں کی ٹیم نے اس صورتحال کو تشویش ناک قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ فیصل آباد میں ہیپاٹائٹس کے لحاظ سے تحصیل چک جھمرہ کے حالات غیر تسلی بخش ہیں-

واضع رہے کہ ایسی ہی ایک رپورٹ 2018ء میں بھی شائع ہوئی جس میں ضلع بھر کی یونین کونسلز کا تجزیہ ہوا اس رپورٹ میں نھی فیصل آباد ہیلتھ سکریننگ ٹیموں نے 5 یونین کونسلز کو ہپاٹائٹس سی کے حوالے سے خطرناک قرار دیا تھا جن میں جڑانوالہ کی یونین کونسل 35 محمد والہ , یو سی 98 ماموں کانجن , جھمرہ کی یو سی 12 (سابقہ 15 ) نلے والا , سمندری کی یو سی 120 اشرف آباد اور فیصل آباد شہر کی سی سی 255 نثار کالونی شامل تھی مگر ان تمام حالات کے جانتے ہوئے بھی چک جھمرہ کے ارباب اختیار نے ہیپاٹائٹس کنٹرول کرنے کے لحاظ سے کوئی موثر حکمت عملی نہیں اپنائی نتجیتنا اس مرض میں غیر معمولی حد تک اضافہ ہوگیا ہے جس سے چک جھمرہ انتظامیہ کی کارکردگی سوالیہ نشان بن گئی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں