سپرداری پر دی جانیوالی موٹرسائیکلوں کے کاغذات ضائع کرنے کا انکشاف ، پولیس کا موقف کیا؟؟

فیصل آباد (عاطف صدیق کاہلوں)

سرکل پولیس افسر کی جانب سے لاک ڈاؤن کے دوران بند کی گئی گاڑی و موٹر سائیکلوں کی سپرداری کے لیے موصول ہونے والےکاغذات پھاڑ دے جانے کا انکشاف ہوا ہے جبکہ سی پی او کی جانب سے 10 دن کی پابندی لگاۓ جانے کا بتا کر سائلین کو انتظار کے جانے کا مشورہ بھی دیا گیا، تاہم ترجمان پولیس نے معاملہ پر لاعلمی کا اظہار کر دیا –

یہ انکشاف تب ہوا جب پیپلز کالونی نمبر 2 کا ایک رہائشی دفعہ 134 کے تحت قبضہ پولیس میں لیے جانی والی موٹر سائیکل کی سپرداری کے کاغذات مکمل کر کے ایس ڈی پی او سرکل بٹالہ کالونی کے دفتر پہنچا تو وہاں موجود عملہ نے اسے آگاہ کیا کہ اس حوالہ سے اسے سی پی او کے حکم کے مطابق 10 دن انتظار کرنا ہوگا جبکہ زارئع کے مطابق یہ بھی معلوم ہوا کہ مجاز افسر نے اس حوالہ سے دائر کی جانے والی درخواستیں مبینہ طور پر پھاڑ کر ٹوکری کی نظر کر دی ہیں تاہم ڈی ایس پی ملک لطیف نے موقف دیتے ہوے درخواستیں پھاڑ دینے والا الزام غلط قرار دیا اور 10 دن کی پابندی کے محکمانہ حکم کی تصدیق کی-

جبکہ اس حوالہ سے ترجمان پولیس انسپکٹر عامر وحید نے لاعلمی کا اظہار کرتے ہوے یہ بھی بتایا کہ سہ پہر 4 بجے کے بعد پی آر او برانچ کو چھٹی ہو جاتی ہے جس وجہ سے اس وقت کے بعد کسی واقعہ یا سی پی او کی طرف سے جاری کردہ مراسلہ بارے موقف دیا جانا ان کے لیے ممکن نہیں-

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں