ابراہیم فائبر سے برطرف ملازمین کی بحالی کیلئے پاسبان لیبر موومنٹ میدان میں نکل آئی؟؟

فیصل آباد، نیوز ڈیسک

ابراہیم فائبرسے ہزاروں ملازمین کی ملازمتوں سے برطرفی کے خلاف پاسبان لیبرموومنٹ پاکستان نے آئندہ کے لاءحہ عمل کا اعلان کردیا،10اگست کو اسلام آبادآئی ایل او کے سامنے دھرنا اورقراردادجمع کروائی جائے گی،اس بات کا اعلان نیشنل لیبر فیڈریشن پاکستان کے مرکزی صدر شمس الرحمن سواتی،پاسبان لیبرموومنٹ پاکستان کے مرکزی صدر میاں اعجازحسین نے المرکزالاسلامی چنیوٹ بازار میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا ۔ اس موقع پر شیخ فہیم الدین،مدثرطور،رانابابرعمران،عارف شاہ ودیگربھی موجودتھے ۔

رہنماءوں نے کہاکہ ابراہیم فائبرگروپ سمیت دیگر ٹیکسٹائل ملز کے مزدوردشمن اقدامات پرلیبرمنسٹراورڈسٹرکٹ حکومتوں کی خاموشی معنی خیز ہے ۔ کروڑوں ملازمتیں دینے کا اعلان کرنے والی حکومت کی ناک نیچے لیبر پالیسی کوپامال کرتے ہوئے لاکھوں محنت کشوں کو بے روزگار کیا جا رہاہے ۔ کروناکی آڑ میں مستقل ملازمین کو برطرف کرکے ڈیلی ویجز ملازمین بھرتی کرنامل ہذاکی بدنیتی ہے جسے کسی صورت قبول نہیں کیا جائے گا ۔ ابراہیم فائبریونٹس میں مسلسل کام ہورہاہے وہ کبھی بند ہی نہیں ہوا تومستقل ملازمین کی برطرفیاں کیوں ;238; ۔ سرمایہ دارانہ نظام کی بجائے حقیقی اسلامی نظام لائیں گے ،ملکی معیشت چلانے والوں کو محرومیوں میں مبتلا کیاجارہاہے ۔ محنت کشوں کے حقوق پر ڈاکہ ڈالنے والوں کو عبرت کا نشان بنا کردم لیں گے ۔ شمس الرحمن سواتی نے اعلان کرتے ہوئے کہاکہ پاسبان لیبرموومنٹ اور محنت کشوں کی پشت پر کھڑے ہیں ان کے مطالبات کے حل کے لئے ہرفورم پر آوازبلندکریں گے ،10اگست کو اسلام آباد میں دھرنا میں این ایل ایف کے سینکڑوں کارکنان بھی شریک ہوکراپنے مزدوربھائیوں کا بازوبنیں گے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں