لاک ڈائون کا پہلا روز ، فیصل آباد کے تاجروں نے فیصلہ مسترد کردیا ، کتنے گرفتار؟؟

فیصل آباد ، علی رومان حسن

پنجاب حکومت کی جانب سے گزشتہ رات 12 بجے سے فیصل آباد سمیت صوبہ بھر میں لاک ڈائون کا آغاز کردیا اور آج سخت لاک ڈاؤن کا آغاز ہوگیا اور پولیس نے زبردستی دکانیں بند کرادیں جس کے خلاف تاجروں نے لاک ڈاؤن کو مسترد کرتے ہوئے سخت احتجاج کیا – فیصل آباد سمیت پنجاب بھر میں عید الاضحی کے موقع پر کورونا وبا کا پھیلاؤ روکنے کے لیے حکومت نے 10 روز کے لیے مارکیٹوں میں سخت لاک ڈاؤن نافذ کردیا۔ دکانیں بند کرانے تاجر برادری سراپا احتجاج بن گئی۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق صوبے کی زیادہ تر دکانیں بند رہیں تاہم بعض مارکیٹیں کھلی رہیں۔ فیصل آباد کے مرکزی آٹھوں بازاروں میں تاجروں نے دکانیں کھولنے کی کوشش کی تو پولیس نے مارکیٹیں بند کرادیں تاہم پولیس کے جانے کے بعد دکانیں پھر کھل جاتیں۔ دکان داروں اور پولیس کے درمیان کافی دیر تک آنکھ مچولی ہوتی رہی – فیصل آباد سمیت صوبے بھر میں تاجر برادری نے اس فیصلے کے خلاف جگہ جگہ احتجاج کرتے ہوئے عید پر کاروبار بند کرنے کو معاشی قتل قرار دیا۔ اس موقع پر حکومت کیخلاف زبردست نعرے بازی کی گئی –

واضح رہے کہ زبردستی دکانیں کھولنے پر ضلعی انتظامیہ اور پولیس حکام نے کارروائی کرتے ہوئے شہر کے 100 تاجروں کی گرفتاری بھی عمل میں لائی گئی ہے جس میں تاجر تنظیموں کے عہدیدار بھی شامل ہیں اور اس وقت بھی تاجر بھوانہ بازار کے باہر سراپا احتجاج ہیں –

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں