عوام پر نیا مہنگائی بم گرانے کا فیصلہ ، پٹرولیم مصنوعات میں کتنے روپے فی لٹر اضافہ متوقع؟

اسلام آباد ، نیوز ڈیسک

پاکستان تحریک انصاف کی وفاقی حکومت نے ایک مرتبہ پھر عوام پر مہنگائی بم یعنی پٹرول کی قیمتوں میں اضافہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے جس کے تحت پیٹرولیم ڈویژن نے سمری وزارت خزانہ کو بجھوادی – میڈیا رپورٹس کے مطابق وزارت خزانہ کو بجھوائی گئی سمری میں 7 روپے اضافے سے پیٹرول کی نئی قیمت 107روپے 11 پیسے اور ڈیزل کی قیمت میں ساڑھے 9 روپے اضافے سے نئی قیمت 110 روپے 96 پیسے فی لیٹر مقرر کرنے کی تجویز دی گئی ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق اسی طرح 6 روپے اضافے سے مٹی کے تیل نئی قیمت 65 روپے 32 پیسے اور لائٹ ڈیزل آئل کی قیمت 6 روپے 21 پیسے اضافے سے 62 روپے 21 پیسے فی لیٹر مقرر کرنے کی تجویز دی گئی ہے – واضح رہے کہ وزارت خزانہ کو بجھوائی گئی سمری میں پیٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں کا تعین 30 روپے فی لیٹر لیوی اور 17 فی صد جی ایس ٹی کی بنیاد پر کیا گیا ہے – یہ بھی واضح کیا گیا ہے کہ پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں کا حتمی فیصلہ وزارت خزانہ وزیر اعظم کی مشاور ت سے کرے گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں