سعودی عرب نے عمرے اور زیارت کے حوالے سے نیا فیصلہ جاری کردیا ہے؟؟؟

ریاض ، انٹرنیشنل نیوز ڈیسک

دنیا بھر کے مسلمانوں کے لئے ایک بڑی خوشخبری سامنے آئی ہے کیونکہ سعودی عرب نے 4 اکتوبر سے عمرہ اور زیارت کی اجازت دے دی۔ سعودی وزارت داخلہ کے مطابق سعودی شہریوں اور مقیم غیر ملکیوں کو عمرہ اور زیارت کی اجازت ہوگی جب کہ عمرہ مرحلہ وار بحال کیا جائے گا۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق سعودی وزارت داخلہ کی جانب سے بتایا گیا ہےکہ پہلے مرحلے میں شہریوں اور مملکت میں مقیم 6 ہزار افراد کو 4 اکتوبر سے عمرہ کی ادائیگی کی اجازت دی گئی ہے جب کہ دوسرا مرحلہ 18 اکتوبر اور تیسرا مرحلہ یکم نومبر سےشروع ہوگا ، اسی طرح چوتھے مرحلے میں عمرہ، زیارت اور نمازوں کی 100 فیصد اجازت ہو گی اور یہ اجازت اس وقت دی جائےگی جب متعلقہ حکام وبا کےخطرات ختم ہونےکا فیصلہ کرلیں گے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق سعودی وزارت داخلہ کا کہنا ہے کہ اس وقت روزانہ کی بنیاد پر تعداد 20 ہزار معتمرین بڑھائی جائےگی جب کہ 60 ہزار افرادکو مسجدالحرام میں نماز اداکرنےکی اجازت ہوگی۔واضح رہے کہ عالمی وبا کورونا وائرس کی وجہ سے مارچ میں عمرے پر پابندی عائد کی گئی تھی اور یہ بھی واضح کیا گیا ہے کہ سعودی حکام کے اس فیصلے کو دنیا بھر کے مسلمان ممالک میں بڑی قدر کی نگاہ سے دیکھا جارہا ہے اور یہ ایک بڑی خوشخبری ہے –

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں