کتنے فیصد اکثریت نے ملکی معیشت کو غلط سمت میں گامزن قرار دیدیا؟؟ حکومتی دعوے کیا؟

اسلام آباد ، نیوز ڈیسک

پاکستان تحریک انصاف کی حکومت کو آئے دو سال سے زائد کا عرصہ ہو گیا ہے اور اس دوران مختلف پالیسیوں کا اعلان کیاگیا جبکہ حال میں ملکی معیشت کو درست راستے پرگامزن کرنے کے دعوے بھی کئے گیے لیکن ایک حالیہ سروے میں پاکستانیوں نے کس طرح اپنی رائے کا اظہار کیا ہے –

میڈیا رپورٹس کے مطابق ملکی معیشت کے بارے میں پاکستانی شہری کیا کہتے ہیں؟ اس سوال پر یہ جواب دیا گیا کہ ملک غلط سمت میں بڑھ رہا ہے – اسی طرح ہر پانچ میں سے چار پاکستانیوں نے ملکی سمت کو غلط قرار دے دیا۔ 79 فیصد نے خیال ظاہر کیا ملک غلط سمت میں بڑھ رہا ہے۔ 21 فیصد نے کہا ملکی سمت درست ہے۔ آئندہ 6 ماہ میں ملکی معیشت میں مزید خرابی کی بھی ہر 5 میں سے 4 پاکستانیوں نے پیش گوئی کی، ریسرچ کمپنی آئی پی ایس او ایس پاکستان نے نیا سروے جاری کردیا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق حال ہی میں کیے گئے ایک سروے کے مطابق ہر پانچ میں سے چار پاکستانیوں نے ملکی سمت کو غلط قرار دے دیا ہے۔ ریسرچ کمپنی آئی پی ایس او ایس پاکستان کی جانب سے گزشتہ ماہ کیے گئے سروے کی رپورٹ جاری کردی گئی ہے۔ ستمبر 2020 میں کیے جانیوالے اس سروے میں ملک بھر سے 1 ہزار سے زائد افراد نے حصہ لیا۔

واضح رہے کہ حکومت کی معاشی ٹیم نے دعوی کیا ہے کہ ملکی معیشت درست گامزن ہے اور پاکستان جلد ترقی کی جانب رواں دوان ہو گا لیکن یہ سروے سب کو غلط کہہ رہا ہے تاہم ابھی تک حکومتی موقف سامنے نہیں آیا ہے –

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں