بھارتی فلم انڈسٹری گندی ترین صنعت ، تینوں سپر سٹار خانز غصے میں آگئے ، کیا اقدام اٹھا لیا؟؟

ممبئی ، شوبز ڈیسک

بھارتی فلم انڈسٹری کے سپرسٹارز تینوں خانز بھڑک اٹھے لیکن اس کی وجہ کیا ہے – اس کی وجہ یہ ہے کہ بھارتی میڈیا کے دو ٹی وی چینلز نے بالی ووڈ کو گندی ترین صنعت کہا تھا جس پر تینوں خانز نے دونوں بھارتی چینلز کے خلاف مقدمہ درج کروا دیا ہے –

میڈیا رپورٹس کے مطابق نوجوان اداکار سشانت سنگھ راجپوت کے کیس کےحوالے سے غیرذمہ دارانہ رپورٹنگ کرنے، بالی ووڈ کو منشیات آور کہنے اور ملک کی گندی ترین انڈسٹری کہنے پر اداکار شاہ رخ خان، عامر خان، سلمان خان، اکشے کمار، اجے دیوگن، کرن جوہر، آدیتیہ چوپڑا اور فرحان اختر سمیت 34 بڑے پروڈکشن ہاؤسز و فنکاروں نے دہلی ہائی کورٹ میں دو بھارتی نیوز چینلز کے خلاف مقدمہ درج کروایا ہے۔ جن چینلز کے خلاف مقدمہ درج کروایا گیا ہے ان میں ری پبلک ٹی وی اور اسی چینل کے دوصحافی ارنب گوسوامی اور پردیپ بھنڈاری جب کہ دوسرا چینل ٹائمز ناؤ اور اس چینل کے صحافیوں راہول شیوشنکر اور نویکا کمار شامل ہیں۔
مقدمے میں کہا گیا ہے کہ ان دونوں چینلز نے بالی ووڈ کے لیے نہایت ہی توہین آمیز کلمات کہے جن میں ’’گند‘‘، ’’گندگی‘‘ اور’’منشیات‘‘وغیرہ شامل ہیں۔ اس کے علاوہ پروڈیوسرز نے یہ بھی کہا کہ ان چینلز نے بالی ووڈ کے خلاف اشتعال انگیز جملے بھی کہے جن میں ’’یہ بالی ووڈ ہے جس کی گندگی کو صاف کرنے کی ضرورت ہے‘‘ ، ’’عرب کے تمام پرفیومز بالی ووڈ کی گندگی اور بدبو کو دور نہیں کرسکتے‘‘ اس کے علاوہ چینلز پر ’’بالی ووڈ ملک کی گندی ترین انڈسٹری ہے‘‘کے الفاظ بھی بولے گئے۔

واضح رہے کہ رواں سال 14 جون کو بالی ووڈ اداکار سشانت سنگھ راجپوت نے خودکشی کرلی تھی۔ سشانت کی خودکشی پچھلے کئی ماہ سے بھارت کا سب سے بڑا موضوع بنی ہوئی ہے۔ اس کیس کی تفتیش کے سلسلے میں منشیات اسمگلنگ کیس میں سشانت سنگھ کی دوست ریحا اور بالی ووڈ کے کئی بڑے نام سامنے آئے ہیں جبکہ اب یہ بات واضح ہو چکی ہے کہ سوشانت سنگھ راجپوت کی موت کی وجہ خودکشی ہی ہے – دونوں ٹی وی چینلز کے خلاف مقدمہ درج تو کروا دیا گیا ہے لیکن پولیس کی جانب سے ابھی کوئی کارروائی شروع نہیں کی جا سکی ہے –

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں