شاہ اویس نورانی نے کوئٹہ جلسہ میں کیا بات کرنا چاہ رہے تھے؟ واضح کردیا، فواد چوہدری نے کیا کہا؟

جمعیت علمائے پاکستان (جے یو پی) کے جنرل سیکرٹری اور پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ کے رہنما شاہ اویس نورانی نے کہا ہے کہ کوئٹہ جلسے میں آزاد پاکستان کی بات کر رہا تھا مگر زبان پھسل گئی۔ انہوں نے واضح کیا کہ آزاد پاکستان کی بات کررہا تھا جس میں آئین و دیگر چیزیں شامل تھیں۔خیال رہے کہ گزشتہ روز وفاقی وزیر اطلاعات سینیٹر شبلی فراز کا کہنا تھا کہ پی ڈی ایم کا بیانیہ ملک دشمن عناصر کی تائیدکر رہاہے، اویس نورانی نے جلسے کے اسٹیج سے آزاد بلوچستان کا نعرہ لگایا جس کی مذمت کرتے ہیں۔ اس پر اویس نورانی نے وضاحت کردی تھی تاہم اس کے باوجود وفاقی وزیر برائے انسانی حقوق شیریں مزاری نے بھی ان پر آج تنقید کی ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق شاہ اویس نورانی کا کہنا تھا کہ لیکن اس بات کو جو رخ دیا گیا وہ افسوسناک ہے، بلوچستان کے لیے 10 سال سے آواز اٹھا رہا ہوں۔ اس حوالے وفاقی وزیر برائے سائنس ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے کہا ہےکہ اویس نورانی نے وضاحت کردی ہے جسے قبول کرنا چاہیے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں