6 سالہ ارحم دنیا کا کم عمر ترین کمپیوٹر پروگرامر بن گئے ، ورلڈ ریکارڈ قائم ، مستقبل میں کیا کرینگے؟؟

احمد آباد ، انٹرنیشنل نیوز ڈیسک

بھارت کے بڑے شہر احمد آباد سے تعلق رکھنے والے 6 سالہ طالبعلم نے پیتھون پروگرامنگ لینگویج امتحان پاس کرکے دنیا کے کم عمر ترین کمپیوٹر پروگرامر ہونے کا ورلڈ ریکارڈ اپنے نام کرلیا۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق کلاس 2 کے طالبعلم ارحم نے مائیکروسوفٹ سرٹیفیکیشن کا امتحان بھوپال شہر کے پیئرسن وی یو ای ٹیسٹ سینٹر سے پاس کیا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق ارحم تلسانیا کا غیر ملکی میڈیا کو دیے گئے انٹرویو میں کہنا تھا کہ’میرے والد نے مجھے کوڈنگ کی تعلیم دی، جب میں 2 سال کا تھا تب میں نے ٹیبلیٹ استعمال کرنا شروع کیا اور 3 سال کی عمر میں میں نے IOS اور Windows کے ساتھ گیجٹ خریدے، بعد میں مجھے معلوم ہوا کہ میرے والد پیتھون میں کام کررہے تھے۔‘ – ہونہارطالب علم نے مزید بتایا کہ ’جب مجھے پیتھون سے سرٹیفکیٹ ملا اس وقت میں شارٹ گیمز تیار کررہا تھا، کچھ وقت بعد انہوں نےمجھ سے میرے کام کے کچھ ثبوت مانگے اورکچھ ماہ بعد میرا کام منظور کرلیا گیا اور مجھے گنیز ورلڈ ریکارڈ سرٹیفکیٹ سے نوازا گیا‘۔

ریکارڈ ہولڈر کم عمر ترین کمپیوٹر پروگرام ارحم کا کہنا تھا کہ بڑے ہوکر بزنس انٹرپرینیور بنناچاہتے ہیں تاکہ وہ ضرورت مندوں کی مدد کرسکوں –

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں