ڈپٹی چیئرمین سینٹ کے نیب پر الزامات ، چیئرمین نیب کا نوٹس، کیا ہدایات جاری کردیں؟؟؟

اسلام آباد ، نیوز ڈیسک

ایک طرف ڈپٹی چیئرمین سینٹ سلیم مانڈوی والا نے نیب افسران پر بڑا الزام لگایا ہے جس کا قومی احتساب بیورو کے چیئرمین جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال نے نوٹس لے لیا ہے – اس حوالے سے نیب سے ایک بیان جاری کیاگیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ چیئرمین نیب جسٹس (ر) جاوید اقبال نے ڈپٹی چیئرمین سینیٹ سلیم مانڈوی والا کی جانب سے نیب پر لگائے گئے الزامات کا نوٹس لے کر نیب راولپنڈی سے متعلقہ کیس کا ریکارڈ طلب کر لیا ہے۔

نیب ہیڈ آفس سے جاری کردہ بیان میں چیئرمین نیب نے کہا کہ وہ تمام اراکین اسمبلی کا قانون کے مطابق انتہائی احترام کرتے ہیں۔ قانون کے مطابق مذکورہ مقدمے کاجائزہ لینے تک تاحکم الثانی مزید کارروائی روکنے کا حکم دے دیا ہے۔ نیب نے اپنے بیان میں کہا کہ کیس کا قانون کے مطابق اور ریکارڈ کی مکمل جانچ پڑتال کے بعد کارروائی کرنے یا نہ کرنے کا فیصلہ کیا جائے گا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق جاری کردہ بیان میں چیئرمین قومی احتساب بیورو نے کہا کہ انصاف کے تقاضوں کو مدے نظر رکھتے ہوئے نیب سلیم مانڈوی والا سے بھی اس حوالے سے متعلق موقف لے گا تاکہ انصاف کے تمام تقاضے پورے کیے جاسکیں۔ انہوں نے ہدایت کی کہ کورونا کے دوران نیب کا کوئی بھی علاقائی دفتر کسی ہسپتال سے کیسز سے متعلق ریکارڈ طلب نہیں کرے گا اور ریکارڈ منگوانا انتہائی ضروری ہوا تو تو متعقلہ صوبائی یا وفاقی حکومت سے رابطہ کیا جائے گا تاہم کورونا کے دوران ہر ممکن کوشش کی جائے گی کہ متعلقہ ریکارڈ طلب نہ کیا جائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں