بجلی کے بلوں پر ایڈوانس انکم ٹیکس کا حکومتی فیصلہ سراسر ظلم قرار ، رانا سکندر اعظم

فیصل آباد(آن لائن)

فیصل آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے سابق صدر و الیکٹرونکس اینڈ انسٹالمنٹ ایسوسی ایشن گروپ لیڈر رانا محمد سکندراعظم خاں نے کہاہے کہ بجلی کے بلوں پر صدارتی ٓآرڈیننس کے ذریعے 35 %ایڈوانس انکم ٹیکس کا فیصلہ حکومتی بے حسی اور عوام کے ساتھ سراسر ظلم ہے سیلز ٹیکس، پوائنٹ آف سیلز میں تاجروں کی جبری رجسٹریشن، پراپرٹی ٹیکس میں اضافہ تاجروں کے ساتھ ظلم اور زیادتی ہے‘ جس کے خلاف تاجر طبقہ خاموش نہیں بیٹھے گا‘ ملک بھر کی محب وطن تاجر برادری FBR کی پالیسیوں سے مایوس ہوچکی ہے‘ تاجروں کے ٹیکسوں سے بھاری تنخواہیں اور مراعات لینے والے اس ادارہ کو اپنی سمت درست کرنا ہوگی۔حکومت نے نا صرف مافیاز کو نوازا بلکہ کرپشن ختم کرنے کا دعویٰ کرپشن میں ریکارڈ اضافے میں تبدیل ہو گیا ہے‘ اگرحکومت نے ملک کو موجودہ معاشی بحران سے نکالنے کیلئے موثر اقدامات اٹھانے سے گریز کیا یا تاجروں کو کھل کام نہ کرنے دیا تو ملک میں مہنگائی و بر روزگاری کو کنٹرول کرنا مشکل ہوجائیگا-

ان خیالات کا اظہار انہوں نے ایسوسی ایشن کی ایگزیکٹو باڈی کے اجلاس سیخطاب کرتے ہوئے کیا‘ اجلاس سے‘ سرپرست ملک غضنفر اعوان‘ صدر رانا فخر حیات خاں‘ جنرل سیکرٹری چوہدری عاصم حبیب‘ چیئرمین چوہدری مقصود احمد‘ سینئر وائس چیئرمین چوہدری حبیب الرحمن گل‘ وائس چیئرمین حاجی محمد انور‘ فنانس سیکرٹری ملک وقاص احمد و دیگر ممبران نے بھی خطاب کیا انہوں نے کہا کہ اسلام اور کلمہ طیبہ کے نام پر معرض وجود میں آنے والے ملک میں ریاست مدینہ کے دعویدار حکمران قرآن وسنت کیخلاف قانون سازی کرکے آئین وقانون اور نظریہ پاکستان کا مذاق اڑایا جارہا ہے حکمرانوں کے قول وفعل میں کھلا تضاد ہے، ریاست مدینہ کے نعرے سے لیکر مہنگائی کے خاتمے تک حکومتی اقدامات اس کے برعکس ہیں‘ حکومت کا تین سالہ دورہ حکومت عوام کی محرمیوں، مایوسیوں اور پریشانیوں کی داستان ہے‘ مہنگائی میں ریکارڈ اضافے نے غریب عوام کا دن کا چین اور رات کا سکون چھین لیا ہے عام آدمی کے لیے دو وقت کی روٹی اور اشیائے ضروریہ پوری کرنا نا ممکن ہو گیا ہے۔آٹا،بجلی،چینی،گھی،پیٹرول،گیس کی قیمتوں میں بار بارظالمانہ اضافہ کیا جارہا ہے۔ جان بچانے والی ادویات کی قیمتوں میں پچاس سے پانچ سو فیصد تک اضافہ ایک جان لیوا عمل ہے‘ انہوں نے کہا ہے کہ خطہ کے دیگر ممالک کی نسبت پاکستان میں بجلی کی قیمت زائد ہونے کے باعث عالمی منڈیوں میں پاکستانی مصنوعات کیلئے شدید مشکلات پیدا ہو رہی ہیں حکومت کو چاہئے کہ پاکستان میں بھی بجلی سستی کی جائے تاکہ بیرون ممالک کی منڈیوں میں ملکی مصنوعات کا مقابلہ اور صنعتی ضروریات کو پورا کیا جا سکے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں