نیا قرض لینے کے لئے پاکستان کی حکومت سے آئی ایم ایف کا نیا حیران کن مطالبہ ؟؟

اسلام آباد ، نیوز ڈیسک

آئی ایم ایف نے نیا قرضہ لینے کے لئے پاکستان کی حکومت سے ایک نیا مطالبہ کردیا ہے اور یہ حیران کن مطالبہ یہ ہے کہ بجلی اور گیس کی قیمت بڑھائی جائے – واضح رہے کہ پاکستان اور عالمی مالیاتی فنڈ کے درمیان قرض پروگرام بحالی کے درمیان ورچوئل مذاکرات جاری ہیں، آئی ایم ایف نے پاکستان سے بجلی اور گیس کی قیمت بڑھانے کا مطالبہ کردیا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق آئی ایم ایف نے کہاکہ انکم ٹیکس، سیلز ٹیکس، ریگولیٹری ڈیوٹی کے حوالے سے مزید اقدامات کئے جائیں۔ آئی ایم ایف نے تجویز دی ہے کہ بجلی کے بیس ٹیرف میں ایک روپے 40 پیسے فی یونٹ اضافہ کیا جائے، بجلی کی قیمت بڑھا کر ہی گردشی قرضے کو قابو کیا جاسکتا ہے ، ایف بی آر ریونیو اکھٹے کرنے کے حوالے سے مزید اقدامات کرے، 58 کھرب سے بڑھا کر63 کھرب محصولات کا ہدف سالانہ ہدف کیا جائے۔ آئی ایم ایف نے مطالبہ کیا کہ ہر طرح کی سبسڈی ختم کی جائے، نجکاری پروگرام کو تیز کیا جائے، نقصان میں چلنے والی سرکاری کمپنیوں کی نیلامی کا ٹائم فریم فراہم کیا جائے ۔ ذرائع کے مطابق ورچوئل مذاکرات کے بعد حتمی مذاکرات میں تمام فیصلوں کو حتمی شکل دی جائے گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں